10

توشہ خانہ کی تفصیلات میں تاخیر کیوں ہوئی، LHC کا استفسار

لاہور (وقائع نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس عاصم حفیظ نے 1947 سے حاصل ہونے والے توشہ خانہ کے تحائف کی تفصیلات جاری کرنے میں تاخیر پر متعلقہ حلقوں کو 19 جنوری تک وضاحت فراہم کرنے کی ہدایت کر دی۔

جسٹس عاصم حفیظ نے توشہ خان سے معززین، بیوروکریٹس اور دیگر حکام کو ملنے والے تحائف کی تفصیلات فراہم کرنے کے لیے متعلقہ حکام کو ہدایت کی درخواست کی سماعت کی۔ کارروائی کے دوران سیکشن آفیسر ندا رحمان عدالت میں پیش ہوئیں اور کہا کہ ایک کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جو اس بات کا جائزہ لے کہ کون سی تفصیلات فراہم کی جاسکتی ہیں۔

تاہم جج نے استفسار کیا کہ جب سب کچھ منظر عام پر آچکا ہے تو تفصیلات کیوں چھپائی جارہی ہیں۔ انہوں نے ریمارکس دیئے کہ اگر توشہ خانہ کی تفصیلات فراہم نہیں کی جا سکتی ہیں تو وضاحت ضروری ہے۔ اس سے قبل وفاقی حکومت کی نمائندگی کرنے والے ایک لا آفیسر نے عدالت سے استدعا کی تھی کہ تحائف کی تفصیلات خفیہ ہیں۔ جسٹس حفیظ نے ریمارکس دیئے کہ جب کوئی شخص توشہ خانہ سے تحفہ خریدتا ہے تو ٹیکس گوشواروں میں اس کا ذکر کرنا پڑتا ہے۔ انہوں نے سوال کیا کہ جب ٹیکس گوشواروں میں تفصیلات درج ہوں تو اسے کیسے خفیہ رکھا جا سکتا ہے۔



Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں